ستاد مرکزی اربعین|کمیته فرهنگی، آموزشی

banner-img banner-img-en
logo

 ادبیات و پژوهش


شہادت حضرت علی اکبرؑ

چاپ
شہادت حضرت علی اکبرؑ

جب اصحاب امام حسین ؑ میں سے کوئی نہ بچا اور صرف بنی ہاشم رہے تو حضرت علی اکبر علیہ السلام جو حسین ، جمیل اور صاحب کردار تھے خیمہ سے باہر آئے اپنے والد بزرگوار سے اجازت جنگ طلب کی امام نے اجازت دی اور ایک مایوسانہ نگاہ آپ کے چہرے پر ڈالی پھر نگاہیں جھکا لیں اور پھر آنسو سے اشک جاری ہوا اور فرمایا: میرےاللہ تو گواہ رہنا کہ اب میں نے اس جوان کو جنگ میں بھیجا ہے جو صورت ، سیرت اور کردار میں تیرے رسول سے سب سے زیادہ مشابہہ تھا اور جب کبھی دیدار رسول کا مشتاق ہوتا تھا تو اس جوان کو دیکھتا تھا ۔

پھر با آواز بلند فرمایا:

اے پسر سعد خدا تیری نسل ختم کردے تو نے میرے رحم کو ،نسل کو کاٹا ہے ۔

حضرت علی اکبرؑ میدان جنگ میں گئے سخت جنگ کی بہت سارے لوگوں کو قتل کیا پھر واپس اپنے والد بزرگوار کے پاس آئے اور عرض کی : بابا جان ! پیاس مجھے مارے ڈال رہی ہے ، اسلحے کا وزن تکلیف دے رہا ہے کیا ایک گھونٹ پانی مل سکتا ہے ؟ امام حسین ؑ نے گریہ کرتے ہوئے فرمایا:

جان پدر ! پانی کہاں سے لاوں ؟ جاو تھوڑی اور جنگ کرو ایک گھنٹہ سے کم بچا ہے کہ تم اپنے جد رسول سے ملاقات کرو اور وہ تمہیں جام کوثر سے سیراب کریں جس کے پینے کے بعد تم ہرگز تشنگی کا احساس نہیں کرو گے ۔

آپ ایک بار پھر میدان میں واپس گئے عظیم جنگ کی یہاں تک کہ منقذ بن مرہ عبدی ملعون نے ایک نیزہ آپ کو مارا آپ گھوڑے سے گر پڑے آواز دی : بابا آپ پر میرا سلام ، میرے جد آپ کو سلام پہونچا رہے ہیں اور فرما رہے ہیں : جلد سے جلد مجھ تک پہونچو ۔ اس کے بعد آپ نے ایک چیخ ماری اور شہید ہوگئے ۔ امام  حسین ؑ علی اکبرؑ کے سراہنے پہونچے اور اپنا چہرہ علی اکبر کے چہرہ پر رکھ دیا اور فرمایا: خدا اس گروہ کو قتل کرے جنہوں نے تمہیں قتل کیا ، انہوں نے کس حد تک خدا و رسول خدا کی نسبت اہانت کی ہے (اے بیٹا ) تمہارے بعد دنیا اندھیری ہے ۔

حضرت زینب کبری ؑ خیمہ سے باہر آئیں اور فریاد کی اے میرے جگر کے ٹکڑے اور اے میرے بھتیجے یہ کہہ کر اپنے آپ کو بھتیجے کی لاش پر گرادیا ، امام نے بہن کے بازو کو پکڑا اور اہل حرم کے خیمہ تک واپس لائے ۔

حضرت علی اکبرؑ کے بعد بنی ہاشم ایک کے بعد ایک میدان جنگ میں گئے اور شہید ہوئے اس وقت امام نے فریاد کی اور کہا:

اے میرے چچا زاد بھائیو! صبر کرو ۔ اے میرے اہل بیت صبر کرو ۔ خدا کی قسم آج کے بعد کبھی رسوائی نہیں دیکھو گے ۔



منابع: لھوف
ارسال کننده: مدیر پورتال
 عضویت در کانال آموزش و فرهنگ اربعین

چاپ

برچسب ها شہادت۔ حضرت علی اکبرؑ ۔ امام حسین۔ کڑیل جوان۔ کربلا۔ جناب زینب۔ ام لیلی

نظرات


ارسال نظر


Arbaeentitr

 فعالیت ها و برنامه ها

 احادیث

 ادعیه و زیارات